انصاف کی فراہمی کے لیے ججز اور وکلا کو مل کر کام کرنا ہوگا،جمال خان مندوخیل

0 5

انصاف کی فراہمی کے لیے ججز اور وکلا کو مل کر کام کرنا ہوگا،جمال خان مندوخیل

کوئٹہ (ویب ڈیسک )چیف جسٹس بلوچستان ہائی کورٹ جسٹس جمال خان مندوخیل نے کہا ہے کہ انصاف صرف عمارت تعمیر کرنے سے نہیں ملتا بلکہ انصاف اس عمارت میں بیٹھے ہوئے لوگ مہیا کرتے ہیں عمارت صرف انصاف فراہم کرنے کے لیے سہولت فراہم کرتی ہے

۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے سریاب روڈ پر نئے جوڈیشل کمپلیکس کے سنگ بنیاد کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ انصاف کی فراہمی کے لیے ججز اور وکلا کو مل کر کام کرنا ہوگا اگر ان سب کے باوجود انصاف فراہم نہیں کیا جاتا تو یہ ہمارے

لئے شرم کا مقام ہوگا ۔تقریب میں فیڈرل شریعت کورٹ کے چیف جسٹس جناب محمد نور مسکانزئی بلوچستان ہائی کورٹ کے معزز جج صاحبان جسٹس نعیم اختر افغان ،جسٹس محمد ہاشم خان کاکڑ، جسٹس محمد اعجاز سواتی، جسٹس کامران ملاخیل، جسٹس ظہیر الدین کاکڑ ،جسٹس عبداللہ بلوچ، جسٹس نذیر احمد لانگو، جسٹس روزی خان بڑیچ، جسٹس عبدالحمید بلوچ، ممبر انسپکشن ٹیم آفتاب احمد لون، رجسٹرار ہائی کورٹ راشد محمود ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج سریاب طارق انور کا سی، سیکریٹری ٹوچیف جسٹس ملک شعیب سلطان ،سیشن جج صاحبان جوڈیشل افسران کے علاوہ رکن قومی اسمبلی آغا حسن بلوچ اراکین صوبائی اسمبلی ملک نصیر احمد شاہوانی، احمد نوازبلوچ، نصراللہ زیرے، اور شکیلہ نوید دہوار کے علاوہ کمشنر کوئٹہ ڈویژن اسفندیار کاکڑ، ڈپٹی کمشنر کوئٹہ مجیر ریٹائرڈ اورنگزیب بادینی،وکلا تنظیموں کے سربراہان مقامی وکلا، قبائلی عمائدین ودیگر متعلقہ حکام نے شرکت کی

You might also like

Leave A Reply

Your email address will not be published.