ملک کو درپیش بحرانوں کی وجہ ووٹر اور ووٹ کو اہمیت نہ دینا ہے، لشکری رئیسانی

0 5

کوئٹہ(ویب ڈیسک) بلوچستان نیشنل پارٹی کے مرکزی رہنماء نوابزادہ حاجی میر لشکری خان رئیسانی نے کہا ہے کہ ملک کو درپیش بحرانوں کی وجہ ووٹر اور ریاست کا ووٹ کو اہمیت نہ دینا ہے ، جہاں ووٹراپنے ووٹ کو اہمیت نہ دیتا ہو وہاں کسی اور سے کیا توقع کی جاسکتی ہے۔حلقہ این اے 265 کے ووٹرز کے حق رائے دہی کا دفاع کررہے ہیں۔ووٹ کاغذ کی پرچی نہیں ہماری اور آئندہ نسلوں کی ترقی وخوشحالی کا زینہ ہے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز ووٹرکے عالمی دن کے موقع پر قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 265 میں منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر نوابزادہ حاجی میرلشکری خان رئیسانی نے مزید کہا کہ دنیا کے وہ ممالک جہاں ووٹر ، ریاست اور ریاستی ادارے ووٹ کو اہمیت، عوامی حق رائے دہی کا احترام کرتے ہیں ترقی کی منازل طے کررہے ہیں مگر بدقسمتی ہے ہمارے ملک میں ووٹر کو اپنے ووٹ کی اہمیت کا اندازہ نہیں ہے۔

اوراس کے الیکشن کے دن ووٹ کاسٹ کرنے میں دلچسپی نہ لینے سے انتخابات میں ووٹ کی شرح کم ہوتی ہے ،انہوں نے کہا کہ جس ملک میں ووٹراپنے ووٹ کو اہمیت نہ دیتا ہو وہاں کسی اور سے کیا توقع کی جاسکتی ہے کہ ووٹر کے ووٹ کو اہمیت دے۔ انہوں نے کہا کہ ہر شخص کی قومی ذمہ داری ہے کہ اپنے ووٹ کو نہ صرف فوراً رجسٹر کرائے بلکہ الیکشن کے دن جب اس کو احتساب اور انتخاب کا موقع میسر آئے تو اپنے ووٹ کو اہمیت دے کیونکہ ووٹ کی پرچی عوام کیلئے وہ واحد ذریعہ ہے

۔جس کے ذریعے وہ اپنی قوم کے مستقبل اور اس کی ترقی کا اجتماعی فیصلہ کرتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ دنیا کی تاریخ ہمارے سامنے ہے جنہوں نے اپنی قوموں کے اجتماعی فیصلے ووٹ کے ذریعے کئے ہیں آج وہ دنیا کے اوپر نہ صرف حاوی ہیں بلکہ ترقی بھی کررہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ملک کو درپیش بحران کی وجہ ریاست اور ووٹر کی جانب سے ووٹ کو اہمیت نہ دینا ہے۔

جس کی واضح مثال قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 265 کی ہے جہاں سے ایک جعلی شخص کو جعلی ووٹوں کے ذریعے انتخابات میں منتخب تو کرایا گیا مگر اس میں حلقہ کے لوگوں کی خدمت کرنے کی نہ تو صلاحیت ہے نہ دلچسپی انہوں نے کہا کہ ہمیں مشترکہ طور پرووٹ کو اہمیت دیتے ہوئے عوامی حق رائے دہی کا تحفظ کرنا ہے جو ہماری قومی ذمہ داری بھی ہے۔

You might also like

Leave A Reply

Your email address will not be published.