جاوید اختر کا ایک اور متنازع بیان آگیا عوام میں شدید غم و غصہ

0 189

بھارت کے نغمہ اور نامہ نگار جاوید اختر کا کہنا ہے کہ اردو بھارتی زبان ہے اس کا جنم پاکستان یا مصر میں نہیں بلکہ علیحدگی سے قبل بھارت میں ہوا تھا۔بھارتی میڈیا رپورٹ کے مطابق شاعری کے مجموعے ’ شاعرانہ سرتاج‘ کی لانچنگ کی تقریب میں گفتگو کے دوران جاوید اختر کا کہنا تھا کہ ’یہ اردو کسی اور جگہ سے نہیں ا?ئی یہ بھارت کی ہی اپنی زبان ہے‘۔

جاوید اختر نے دعویٰ کیا کہ ا±ردو بھارت سے باہر نہیں بولی جاتی جبکہ پاکستان بھارت سے علیحدگی کے بعد وجود میں ا?یا ہے اور پاکستان بھی بھارت کا ہی حصہ ہے۔جاوید اختر نے تقریب میں کے شرکائ سے سوال کیا کہ ’ا?پ نے اردو کو کیوں چھوڑ دیا ہے؟ بٹوارے کی وجہ سے، پاکستان کی وجہ سے؟ اردو کو توجہ دی جانی چاہیے۔‘

جاوید اختر کا کہنا تھا کہ بھارتی پنجاب کا ا±ردو کی فروغ میں بڑا ہاتھ ہے اور یہ بھارت کی اپنی زبان ہے۔نغمہ نگار نے کشمیر کے حوالے سے بات کرتے ہوئے شرکائ سے مزید سوال کیا کہ پاکستان کہتا ہے کہ کشمیر ا±ن کا ہے تو کیا ا?پ مان لیں گے؟ بلکل اس ہی طرح ا±ردو بھی پاکستان کی نہیں بھارت کی زبان ہے اور رہے گی۔

یاد رہے کہ جاوید اختر گزشتہ ماہ فیض میلے میں شرکت کیلئے پاکستان ا?ئے تھے جہاں گفتگو کے دوران انہوں نے پاکستان پر ممبئی حملوں کا الزام لگایا تھا جس پر عوام کا شدید ردِعمل سامنے ا?یا تھا۔

You might also like

Leave A Reply

Your email address will not be published.