جام کمال کے خلاف تحریک عدم اعتماد کامیاب ہوئی تو بلوچستان اسمبلی ٹوٹ سکتی ہے

0 14

کوئٹہ(ویب ڈیسک)۔وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان کے خلاف عدم اعتماد کی تحریک کو ناکام بنانے کے لیے چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی اور بلوچستان عوامی پارٹی کے دیگر ارکان سینٹ اور قومی اسمبلی نے پارٹی ارکان سے ملاقات کرکے ان کے تحفظات سنے جس کے بعد انہوں نے وزیراعلیٰ جام کمال خان سے بھی ملاقات کی ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ بلوچستان

عوامی پارٹی کے باغی ارکان میں وزارت اعلیٰ کے نام پر آپس میں پھوٹ پڑ گئی ہے جس کی وجہ سے جام کمال کے خلاف عدم اعتماد کی تحریک کی کامیابی کے امکانات معدوم ہو گئے اور بعض ذرائع ان اختلافات کو چھپانے کے لئے وزیر اعلیٰ جام کمال خان کی جانب سے مستعفی ہونے کی خبریں نشر کر رہے ہیں جس میں کوئی صداقت نہیں ہے اس کے ذرائع نے بتایا کہ بی این پی کے سربراہ سردار اختر مینگل نے بھی اپنے ارکان کو عدم اعتماد کی اس جھانسے سے دور

رہنے کی ہدایت کی ہے کیوں کہ وہ عبدالقدوس بزنجو پر اعتماد نہیں کرتے ماضی میں بھی وہ ایسے شوشا چھوڑ کر پرانی تنخواہ پر کام کرتے ہیں ذرائع نے بتایا کہ نہ تو وزیر اعلی جام کمال خان نے مستعفی ہونے کا فیصلہ کیا ہے اور نہ ہی بی این پی کی جانب سے مستقبل میں باپ پارٹی کے کسی رکن کی حمایت کا امکان ہے ایسی صورت میں اگر باپ پارٹی کے ارکان نے اپوزیشن کے امیدوار کو وزارت اعلیٰ کا منصب نہ دیا اور آپس میں اختلافات رہے ہیں تو ایسی صورت میں اس بات کا امکان ہے کہ بلوچستان اسمبلی تحلیل ہو جائے گی۔

You might also like

Leave A Reply

Your email address will not be published.