نیول چیف کی امریکہ میں منعقدہ چوبیسویں بین الاقوامی سی پاور سمپوزیم میں شرکت

0 167

اسلام آباد،(بیورو چیف)چیف آف دی نیول اسٹاف ایڈمرل محمد امجد خان نیازی نے امریکہ کا دورہ کیا اور 24 ویں انٹرنیشنل سی پاور سمپوزیم 2021 میں شرکت کی۔ دورے کے دوران، نیول چیف نے وہاں موجود دیگر بحری افواج کے سربراہان سے ملاقاتیں کیں۔

بین الاقوامی سی پاور کانفرنس امریکی نیول وار کالج نیو پورٹ میں ہر دو سال بعد منعقد کی جاتی ہے۔ یہ فورم عالمی بحری رہنماؤں کو ایک منفرد موقع مہیا کرتا ہے جہاں مشترکہ بحری چیلنجز سے نمٹنے اور بین الاقوامی میری ٹائم سیکورٹی تعاون کو بڑھانے کے لیے تبادلہ خیال کیا جاتا ہے۔ اس سال سمپوزیم کا موضوع “اتحاد میں طاقت” تھا اور اس میں 80 سے زائد ممالک کے وفود بشمول مختلف ممالک کی بحریہ اور کوسٹ گارڈز کے سربراہان نے شرکت کی۔ سمپوزیم کے دوران چند اہم موضوعات پر مباحثے کیے گئے جن میں Sea Power in Information Age, Combating The Invisible Foe COVID-19 اور Illegal Unreported And Unregulated Fishing شامل تھے۔ مقررین کو سننے کے علاوہ، فورم علاقائی اور عالمی سمندری سیکیورٹی میں اضافہ کے لیے انفرادی خیالات اور تجاویز بھی طلب کرتا ہے ۔

سمپوزیم کی سرگرمیوں کے ساتھ ساتھ، چیف آف دی نیول اسٹاف ایڈمرل محمد امجد خان نیازی نے امریکہ کے سیکریٹری برائے نیوی کارلوس ڈیل ٹورو، امریکی بحریہ کے اعلی حکام اور ارجنٹائن، فرانس، جرمنی، گھانا، جاپان، سری لنکا اور ترکی کی بحریہ کے سربراہوں سے بھی ملاقاتیں کیں۔ ملاقاتوں کے دوران باہمی دلچسپی کے امور ، بحری ماحول میں ابھرتے ہوئے مشترکہ چیلنجز اور دوطرفہ بحری تعاون پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ سربراہ پاک بحریہ نے کمبائنڈ میری ٹائم فورس آپریشنز میں تعاون اور پاک بحریہ کی جانب سے شروع کی جانے والی ریجنل میری ٹائم سیکیورٹی پٹرولز کے ذریعے بحر ِہند میں امن و استحکام کے قیام کے لیے پاک بحریہ کے عزم کے حوالے سے دیگر بحری سربراہان کو آگاہ کیا۔

قبل ازیں ، نیول چیف نے امریکی سرفیس وارفیئر اسکول کا دورہ بھی کیا اور انہیں عالمی سمندری ماحول میں ابھرتے ہوئے خطرات سے نمٹنے میں امریکی بحریہ کے کردار کے بارے میں بریفنگ دی گئی۔

توقع ہے کہ چیف آف دی نیول اسٹاف کا حالیہ دورہ علاقائی اور عالمی میری ٹائم سکیورٹی بڑھانے کے لیے وہاں موجود بحری افواج کے ساتھ دو طرفہ تعاون کو فروغ دے گا۔

You might also like

Leave A Reply

Your email address will not be published.