کو ئٹہ شہر میں تجا وزات، ٹریفک مسائل اور شاہرا ہوں کی تو سیع ودیگر سے دا ئر آ ئینی درخواست کی سما عت

0 259

کوئٹہ: بلو چستان ہا ئی کو رٹ کے جسٹس جما ل خا ن مندوخیل اور جسٹس روزی خان پڑیچ پر مشتمل بنچ نے کو ئٹہ شہر میں تجا وزات، ٹریفک مسائل اور شاہرا ہوں کی تو سیع ودیگر سے متعلق سید نذیر آ غا ایڈووکیٹ کی جا نب سے دا ئر آ ئینی درخواست کی گزشتہ روزسما عت کی ۔سما عت شروع ہو ئی تو میٹرو پو لیٹن کا ر پوریشن کے کونسل نے تجا وزات کے خلا ف کا رروائی سے متعلق ایک رپورٹ جمع کرا ئی اورمو قف اختار کیا کہ تجا وزات کے خلا ف کا رروائی معمول کے مطابق جا ری ہے بلکہ کا رپوریشن اس کا سلسلہ جا ری رکھے گی ،ایڈووکیٹ جنرل نے ڈپٹی انسپکٹر جنرل پولیس کو ئٹہ کے ہمرا ہ پیش ہو کر بتا یا کہ حکومت نے شہر بھر میں متوازی ٹریفک پا رکنگشروع کر نے کا فیصلہ کیا ہے بلکہ شہر میں ٹریفک مسائل کے حل کے لئے ٹریفک پو لیس کی نفری میں اضا فہ سمیت دیگر اقداما ت کئے ہیں، ڈی آ ئی جی پولیس نے بتا یا کہ کہ محکمہ پولیس نے شہر میں ٹریفک جا م کے حوالے سے وزیر اعلیٰ بلو چستان کی ہدا یت پر ایک پریزنٹیشن تیا ر کی ہے جسے وہ وزیر اعلیٰ بلو چستان کو پیش کر یں گے ان کے کہنے پر ،تو قع ہے کہ جلد ہی وزیر اعلیٰ بلو چستان ڈی آئی جی پولیس سے پریزنٹیشن لیکر کو ئٹہ ٹریفک ما سٹر پلا ن کی منظو ری دیںگیاگر ما سٹر پلا ن کی منظو ری دی گئی تو اس کو عملی جا مع پہنا نے میںمتوقع طور پر خا طر خواہ وقت لگ سکتا ہے تب تک کے لئے ڈی آ ئی جی پولیس اور ایس ایس پی ٹریفک پو لیس نے ٹریفک مسئلے کے حل کے لئے مختصرالمدتی تجا ویز بھی دیں ہیںٹریفک مسائل کے حل کے لئے شہر میںفوری طور پر مختلف علا قوں میں سلپ روڈز کی تجویز دی گئی اور بتا یا گیا کہ خاص کر سائنس کا لج ، سلیم میڈیکل جنکشنز ، کوا ری روڈ ،جناح روڈ، پٹیل روڈ و دیگر پر اس پلا ن کو آ سا نی سے عملی جا مع پہنا یا جاسکتا ہے اس پر عمل در آ مدنسبتا آ سان ہے کیو نکہ مجوزہ سلپ روڈ کے ادر گرد مختلف حکو متی محکموں کی پراپر ٹیز ہیں،میٹرو پو لیٹن کا ر پو ریشن کے ایڈمنسٹریٹر نے بتا یا کہ وہ متعلقہ اتھا رٹیز سے را بطہ کریں گے تا کہ سٹیٹ کی پراپرٹی کا کچھ حصہ سڑکوں کے لئے دیا جا سکے ،ان کے مطابق کئی ایسی کھلی جگہیں میٹرو پولیٹن کا ر پوریشن کی ہیں جنہیں عارضی طو ر پر گا ڑیوں اور مو ٹر سائیکلوں کی پا ر کنگ کے طو ر پر استعمال میں لا یا جا سکتا ہے انہوں نے تجویز دی کہ اگر ممکن ہو تو وہ سر کلر روڈپر زیر تعمیر پا رکنگ پلا زہ کے استعما ل کی اجا زت دیں گے ،درخواست گزار نے عدالت کی توجہ کواری روڈ کے سامنے جناح روڈ اور زرغون روڈ کو ملا نے والے لنک روڈ کی جا نب مبذول کرا ئی اور کہا کہ مذکو رہ لنک روڈ فی الوقت غیر فعال ہے ،میٹرو پولیٹن کا رپوریشن کے ایڈمنسٹریٹر اور ریوینیو اسٹاف سائٹ جا ئیںاگر روینیو ریکا رڈ کے مطابق سڑک کنفرم ہوا تو اسے فو ری طور پر کھو لا جا ئے اور اگر انہیں مشکل پیش آ ئی تو ڈی آ ئی جی پولیس ان کی معا ونت کریں اگر کسی فرد یا ادارہ کو اس سلسلے میں اعتراض ہے تو وہ اس عدالت کے روپرو پیش ہو کر اپنا موقف بیان کریں ۔تجا وزات کے خلا ف کا رروائی جا ری رہنی چا ہئیے اس سلسلے میں پراگریس رپورٹ اگلی سما عت پر پیش کی جا ئیں ،ایڈمنسٹریٹر ان کھلی جگہوں کی نشاندہی کرا ئیں جو میٹرو پو لیٹن کا رپوریشن کی ملکیت ہیں اور دیکھا جا ئے کہ وہاں مستقل اور عارضی پا رکنگ کا سلسلہ شروع کیا جا سکتا ہے ،سلپ روڈز کے سلسلے میں حکوتی اور پرائیویٹ اراضی کی چھوٹے پورشن کی ضرورت ہو گی اس سلسلے میں ہر حکومتی ادارہ کا سربراہ انتظا میہ کے ساتھ تعاون کریں ، اور پرائیویٹ اراضی کی جہاں ضرورت ہے وہاں حکومت اس کا انتظا م کرا ئیں اس طرح ایڈمنسٹریٹر منصو بہ کو عملی جا مع پہنا سکیں گے ۔کنٹو نمنٹ بورڈ کے سی ای او نے بتا یا کہ اگراجا زت دی جا ئے تو خوجک iiما رکیٹ پلا زہ کے ایل شکل میں بنی دو دکانیں ہٹا کر انہیںدوسرے دکا نوں کے پہلو میں بنا یا جا ئے گا یہ ٹریفک کی روانی میں مددگار ہو گی، دکا نوں کو ہٹا نے سے سمنگلی روڈ میں 12فٹ توسیع ہو گی ایف سی کو خا لی پلاٹ میں پارکنگ پر تحفظات ہیں تو سی ای او ایف سی کو مطمئن کر نے کے لئے در کا ر اقداما ت اٹھا ئے بجا ئے اس کے کہ کا رپارکنگ ختم کی جا ئے سی ای او کنٹونمنٹ بورڈ نے مجا ز حکام سے تجا ویز پر عمل در آ مد کے لئے را بطہ کے لئے عدالت سے مہلت طلب کی جس پر انہیں اجا زت دے دی گئی آئینی درخواست کی اگلی سما عت 16اکتوبر کو ہو گی۔

You might also like

Leave A Reply

Your email address will not be published.