آئندہ نااہلی دکھانے والے آفیسران کے خلاف بھی سخت کاروائی کی جائیگی، عظیم کاکڑ

0 203

دکی(خ ن)ڈپٹی کمشنر دکی عظیم کاکڑ کی زیر صدارت چوری اور ڈکیتی کی وارداتوں کی روک تھام کے سلسلے میں اعلی سطحی اجلاس منعقد ہوااجلاس میں اسسٹنٹ کمشنر حضرت ولی کاکڑ،ایس ایچ او د محمد رفیق، ایڈیشنل ایس ایچ او عبداللہ باتوزئی،رسالدار میجر لیویز علی محمد شادوزئی،لیویز رسالدار اسرار احمد ترین اور لیویز تھانوں کے انچارج نے شرکت کی۔اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے ڈپٹی کمشنر عظیم کاکڑ نے کہا کہ روزانہ چوری اور ڈکیتی کی سات آٹھ وارداتیں رپورٹ ہوتی ہیں مگر پولیس اور لیویز کی کارکردگی نہ ہونے کے برابر ہے انہوں نے غیر حاضری پر 19 لیویز اہلکاروں کی دس سے بیس دن کی تنخوائیں کاٹنے کا حکم دیتے ہوئے کہا کہ آئندہ لیویز ایریا میں واردات رپورٹ ہونے پر متعلقہ انچارج سے پندرہ دن کی تنخواہ کاٹی جائیگی انہوں نے کہا کہ ایس ایچ او جرائم کا ایف آئی آر درج نہیں کرتا اور سائلین کو اطلاعی رپورٹ دینے کے لئے کہتا ہے جوکہ اب برداشت نہیں کی جائیگی

 

 

 

،انہوں نے ہدایت جاری کی کہ آئندہ درخواست پر فوری طور پر ایف آئی آر درج کی جائے، وارداتوں کی روک تھام کے سلسلے میں گشت بڑھا کر دن رات کیا جائے اور اس سلسلے میں لیویز اور پولیس کی مختلف ٹیمیں تشکیل دی گئی جوکہ مشترکہ گشت کریگی،جبکہ اسسٹنٹ کمشنر حضرت ولی کاکڑ ان ٹیموں کی نگرانی کرینگے،انہوں نے کہا کہ چوروں اور ڈاکوں کے خلاف بلا امتیاز آپریشن کرکے انکے ٹھکانوں پر چھاپے مارے جائیں اور سخت سے سخت قانونی کاروائی کرکے ایف آئی آر درج کیا جائے۔اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ آئندہ نااہلی دکھانے والے آفیسران کے خلاف بھی سخت کاروائی کی جائیگی، دکی شہر مکمل طور پر ڈیڑھ کلومیٹر ہے اس ایریا میں وارداتوں پر قابو نہ پانا پولیس اور لیویز کی ناکامی ہے آئندہ غفلت برداشت نہیں کی جائیگی۔

You might also like

Leave A Reply

Your email address will not be published.