دوبارہ حشر زمیں پر بپا نہیں ہوناہزار لاشیں گریں کربلا نہیں ہونا

0 47

دوبارہ حشر زمیں پر بپا نہیں ہونا
ہزار لاشیں گریں کربلا نہیں ہونا

نبی کی آل پہ جو کربلا میں گزرا ہے
زمیں پہ اُس سے بڑا سانحہ نہیں ہونا

حُسین ایک ہی گزرا ہے ایک ہی ہے سدا
حُسین جیسا کوئی دوسرا نہیں ہونا

گرا ہو پاک لہو جس زمیں پہ میرے حبیب
وہاں زمیں نے بھی صدیوں ہرا نہیں ہونا

جوان بیٹے کو مقتل میں بھیج دے تنہا
کسی میں اتنا بڑا حوصلہ نہیں ہونا

عاصم تنہا

You might also like

Leave A Reply

Your email address will not be published.