عبدالرزاق ساسولی کی سربراہی میں کورونا وائرس کے حوالے سے محکمہ صحت اور علمائے کرام کے ساتھ ڈپٹی کمشنر افس میں اعلی سطحی میٹنگ

0 12

پنجگور(نامہ نگار) ڈپٹی کمشنر پنجگور عبدالرزاق ساسولی کی سربراہی میں کورونا وائرس کے حوالے سے محکمہ صحت اور علمائے کرام کے ساتھ ڈپٹی کمشنر افس میں اعلی سطحی میٹنگ میں ڈی ایچ او پنجگور ڈاکٹر نادر بلوچ پی پی ایچ ائی کے ڈی ایس ایم‌ڈاکٹر منیراحمد اے سی پنجگور امجدحسین سومرو ایم ایس سول اسپتال پنجگور ڈاکٹر انور عزیز ڈپٹی ڈی ایچ او ڈاکٹر شبیر احمد پیتالوجسٹ ڈاکٹر حنیف ڈبلیو ایچ او کے نمائندہ ڈاکٹر میر ارسلان جمعیت علمائے اسلام کے ضلعی امیر حافظ محمد اعظم بلوچ مولانا شیخ عبدالحمید مدنی ولی ساسولی اور دیگر نے شرکت کی اس دوران ڈپٹی کمشنر پنجگور عبدالرزاق ساسولی نے کہاکہ کورونا وائرس ایک سنجیدہ مسلہ ہے اوریہ جس تیزی کے ساتھ مکران کو اپنی لپیٹ میں لے رہا ہے پنجگور بھی اس کے اثرات سے محفوظ نہیں رہے گا عام لوگوں کے ساتھ ساتھ تمام باشعور طبقات اس وبا کیخلاف یکسوئی اختیار کریں اور خصوصاً علمائے کرام کا کردار موجودہ حالات میں انتہاہی اہم ہے اور انکا عوام کے ساتھ زیادہ رابطہ ہے علمائے کرام مساجد میں خطبات کے دوران کورونا وائرس پرعوام کو اگاہی دیں تاکہ وہ احتیاطی تدابیر اختیار کرکے ٹیسٹ اور ویکسین کے عمل کا حصہ بنیں انہوں نےکہاکہ صوبائی حکومت نے پنجگور میں کورونا کی حساسیت کے پیش نظرٹیسٹ کے لیے پیتالوجسٹ ڈاکٹربھیج دیا ہے تاکہ شہری مقامی سطح پر ٹیسٹ کی سہولتوں سے اسفادہ کرکے کورونا کے خطرات اور مضراثرات سے اگاہ ہوسکیں انہوں نے کہا کہ ٹیسٹ چونکہ احتیاطی تدابیر کا حصہ ہے جس سے خود کی زندگی محفوظ بنانے کے ساتھ دوسروں کو اس وبا سے محفوظ رکھا جاسکتا ہے انہوں نے کہا کہ ایس او پیز کو فالو کرنا ہم سب کی زمہ داری ہے اور ویکسئینشن کے عمل میں بھرپور شرکت کی جائے تاکہ اس وبا کو مذید پھیلنے سے روکا جاسکے انہوں نے کہا کہ پنجگور کے عوام اور علماء کرام موجودہ وبائی حالات میں ضلعی انتظامیہ اور محکمہ صحت کے ساتھ بھرپور تعاوں کررہے ہیں انہوں نے کہا کہ ہمیں تربت گوادر اور کراچی کے حالات سے سبق سیکھنے کی ضرورت ہے اور خدانہ کرے کہ ہم بھی ان کی طرح کسی ازمائش سے گزرجائیں اس سے پہلے ہمیں اپنی جان سلامتی اور دوسروں کی زندگیوں کا خیال رکھنا ہے تربت گوادر اور کراچی کے جو حالات ہیں وہ انتہاہی پریشان کن ہیں انہوں نے کہا کہ سندھ حکومت نے بڑھتے ہوئے کورونا کیسز پر سفری پابندیاں بھی لگائی ہیں جس نے ویکسئن نہیں کیاہے وہ سندھ میں داخل نہیں ہوسکتا ہے ڈی ایچ او پنجگور نادر بلوچ نے کہا کہ پنجگور میں 8ہزار لوگوں نے ویکسین کروایا ہے پی سی ار مشین‌کو انسٹال کررہے ہیں جو کورونا وائرس کے ساتھ دیگر ٹیسٹوں کے لیے بھی کارامد ہوگا تیسری لہر ڈیلٹا زیادہ خطرناک ہے انہوں نے کہا کہ عوام زیادہ سے زیادہ تعداد میں ٹیسٹ کرائیں ایک فرد کی وجہ سے پورا گھر متاثر ہوسکتا ہے شہری مسلے کی سنگینی کو سمجھ کر احتیاطی تدابیر اختیار کریں انہوں نے کہا کہ ہمارے وسائل محدود ہیں اور محدود وسائل کو مدنظر رکھ کر ہمیں اپنے معمولات کو اگے بڑھانا ہوگا انہوں نے کہا کہ ویکسین کا کوئی نقصان نہیں ہے قوموں پر مشکل وقت اتے رہتے ہیں مگر وہ ملکر اس کا مقابلہ کرتی ہیں ڈی ایچ او نے کہا کہ وشبود تسپ اوردیگر علاقوں کی بی ایچ یوز میں ویکسین اور سمپلنگ کا کام ہورہا ہے عیسئی اور شاہو کہن سریکوران میں بھی ویکسیین اور سمپلنگ کی سہولیات دستیاب ہیں جہاں شہری ویکسین اور سمپلنگ کراسکتی ہیں اس دوران ممتاز عالم دین اور جمعیت کے ضلعی امیر حافظ محمد اعظم نے کہا کہ علمائے کرام کو کورونا ویکسین کی بابت کوئی اختلاف اور خدشات نہیں ہے عوام ویکسین کے عمل میں زیادہ سے زیادہ شرکت کرکے تمام احتیاطی تدابیر کو اپنائیں اسلام بھی ہمیں احتیاط کا درس دیتا ہے علاج سنت ہے جب کوئی چیز سنت کے دائرے میں اتا ہے تو اس پر رائے قائم کرنا غلط ہوگا پنجگور کے عوام کورونا ویکسین لگوائیں تاکہ وہ اس وبا سے محفوظ رہیں

You might also like

Leave A Reply

Your email address will not be published.